پوسٹ تلاش کریں

عسکری وسیاسی گٹھ جوڑ کیخلاف وکلاء آپ نکلو

عسکری وسیاسی گٹھ جوڑ کیخلاف وکلاء آپ نکلو اخبار: نوشتہ دیوار

عسکری وسیاسی گٹھ جوڑ کیخلاف وکلاء آپ نکلو

حسین شہید سہروردی، ولی خان، باچا اور بھٹو ہر عوامی لیڈر کو انہوں نے غدار قرار دیدیاہر جگہ انکا قبضہ ہے

عمران خان نے اسٹیٹس کو کی مخالفت کی تو اب اس کو غدار قرار دیا۔PDMسے جمہوریت بھی شرمندہ ہے

ایڈوکیٹ رابعہ باجوہ کا اسلام آباد وکلاء کنونشن سے خطاب
ہماری سپریم کورٹ بار ایسوس ایشن پاکستان کے عوامی وفاق کی علامت ہے یہ پاکستان کا عوامی وفاق ہے کہ جس نے پاکستان کے پورے وکلاء اور پاکستان کی عوام کو جوڑ رکھا ہے۔ محترم ساتھیو! اس وقت جب پورا نظام کیپچرڈ ہے۔ ملک کے اندر آئین اور قانون لاپتہ ہیں۔ جہاں عدالتیں غیر فعال ہیں۔ جہاں پر ہر طرف گمنام پہرے ہیں۔ آپ سب کو خراج تحسین پیش کرتی ہوں کہ (وکلاء کے نعرے … زندہ ہیں وکلاء زندہ ہیں آئین کی خاطر زندہ ہیں ) ہم یہ سلسلہ کب سے دیکھ رہے ہیں۔ مجھے یاد ہے کہ حسین شہید سہروردی پاکستان کے وزیر اعظم اور مایہ ناز سیاستدان کو ان جرنیلوں نے غدار کہا انہوں نے ہمارے … آج یہ عمران خان سابق وزیر اعظم پاکستان جس نے اسٹیٹس کو کو چیلنج کیا آج اس کو غدار کہہ رہے ہیں۔ انہوں نے ولی خان، باچاخان ، بھٹو جو بھی عوامی امنگوں کا ترجمان تھا اس کو یہ غدار کہتے رہے۔ میں پوچھتی ہوں کہ پاکستان کی فضاؤں کو دیکھ لیں، میں بہاولپور گئی وہاں پر ریگستانوں کو دیکھا، یہاں کی زمینوں کو دیکھ لیں، فضاؤں کو دیکھ لیں، بلوچستان کے پہاڑوں کو دیکھ لیں، کسی بھی ادارے کو دیکھ لیں، ہر جگہ توآپ کا قبضہ ہے۔ پاکستان کی سیاسی اشرافیہ اور پاکستان کی عسکری اشرافیہ کے اس گٹھ جوڑ کو ہم مسترد کرتے ہیں۔ انہوں نے اس نظام کو عسکری نظام اور عسکری ریاست میں تبدیل کردیا جو پاکستان جمہوری ریاست تھی۔ کل آرمی چیف جنرل عاصم منیر کو کس نے اختیار دیا؟، آئین میں کونسا اختیار ہے کہ آپ کاروباری حضرات سے ملاقات کریں۔ آپ پاکستان کیلئے روڈ میپ دیں کہ ادھر سے فنڈز آرہے ہیں۔ آپ فائنانس منسٹر ، لاء منسٹر، فارن منسٹر بھی ہیں۔ آپ نے ہر ادارے سیاستدانوں میں اور بار کے غداروں کو بھی جنہوں نے وکلاء تحریک کو بیچا جو آج وکلاء کو تقسیم کررہے ہیں ان کو اکھٹا کیا۔ پھرPDMکی جماعتوں نے بہت قانون سازی کی کہ آج جمہوریت بھی شرمندہ ہے۔ آپ نے ان سب کو اکھٹا کرکے سیاسی عمل کو روک کر متوازی نظام ِ بے آئین قائم کیا ۔میں اپنے وکلاء برادری، غیور وکلاء ساتھیوں اور بہنوں کو بھی جن کا بہت کردار ہے پاکستان کی جمہوریت بچانے میں۔ درخواست کروں گی کہ اپنی صفوں میں کالی بھیڑوں کو تلاش کریں کبھی ان پر اعتماد نہ کرنا۔ یہ یاد رکھنا ہے ، پلیز میری درخواست ہے کہ پاکستان کا صرف ایک ادارہ بچا ہے جو مزاحمت کرسکتا ہے صرف ایک ادارہ ہے جو ان کی آنکھوں میں آنکھیں ڈال کر ان کو چیلنج کرسکتا ہے وہ لوگ آپ ہیں۔ آپ لوگ کبھی ان بدکردار ان کالی بھیڑوں کو نہ بھولئے گا کہ جنہوں نے آپ کے مفادات کا ہمیشہ سودا کیا۔ جو حکمرانوں کیساتھ ملتے ہیں۔ جو فوجیوں کے گرد نوکری کرتے ہیں۔ آپ لوگوں نے ان کو پہچان کر اور ،، دیکھئے ہمیں فخر ہے کہ ہمارے قائد عابد زبیری صاحب جو فخرہیں پاکستان کی عوام کا کہ جن پر نہ صرف وکلاء کمیونٹی بلکہ پورا پاکستان اعتماد کرتا ہے۔ اس ریاست نے جو جبر کیا9مئی کے مشکوک واقعہ کو بنیاد بناکر مجھے یہ بتائیے کہ ہمارا ایک کلچر ہے خواتین کی رسپیکٹ کا انہوں نے اس کو پامال کیا۔ جس طرح9مئی کے واقعے نے آپ کا پورا جوڈیشنل سسٹم ایکسپوز کردیا۔ یہ جو بزدل ججز بیٹھے ہیں ان میں اتنی ہمت نہیں کہ یہ ان فیصلوں کو کردیں کہ ان بیلز کا فیصلہ کردیں۔ آخر میں صرف یہی گزارش کروں گی کہ اگر ریاست نے عوام سے بغاوت کی ہے تو اس جبر کے خلاف بغاوت ہم پر بھی لازم ہے۔ میں اب گزارش کروں گی اپنے اس ہاؤس سے ، سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن سے کہ اب آپ لوگ باہر نکلنے کیلئے لائحہ عمل دیں۔ میں آپ سے گزارش کروں گی کہ ہر جمعرات کا دن جس میں ہم نے (قریب سے آواز آئی ”دیکھیں سیاسی نہیں”) اچھا سیاسی نہیں ہم لوگ تو سارے ہی جمہوریت کی بات کرتے ہیں ہماری جنگ اسٹیبلشمنٹ کے خلاف ہے چاہے کوئی بھی سیاسی جماعت اقتدار میں ہو بار کا رول ہمیشہ اپوزیشن کا رول رہا ہے اور میں یہی توقع کرتی ہوں کہ پوری پاکستان کی عوام آپ کے منتظر ہیں۔ اگلی جمعرات کو آپ لوگ کال دیں ملک گیر احتجاج کی۔ ہر بار اپنی جگہ پر احتجاج کرے۔ ہر بار احتجاج کرے۔ ہر جگہ پر ہاؤس ہو اور پھر اگلے لائحہ عمل کا اعلان کرے۔ اور آخرمیں آپ کی نظرمیں
میں باغی ہوں میں باغی ہوں
میں باغی ہوں میں باغی ہوں
میرے ہاتھ میں حق کا جھنڈا ہے
میرے سر پہ موت کا پھندا ہے
میں مرنے سے کب ڈرتی ہوں
میں موت کی خاطر زندہ ہوں
میرے خون کا سورج چمکے گا
تو بچہ بچہ بولے گا
میں باغی ہوں میں باغی ہوں
میں باغی ہوں میں باغی ہوں

اخبار نوشتہ دیوار کراچی
شمارہ اکتوبر 2023
www.zarbehaq.com
www.zarbehaq.tv
Youtube Channel: Zarbehaq tv

اس پوسٹ کو شئیر کریں.

لوگوں کی راۓ

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

اسی بارے میں

مولانا فضل الرحمن کو حقائق کے مفید مشورے
حکومت وریاستIMFسے قرضہ لینے کے بجائے بیرون ملک لوٹ ماراثاثہ جات کو بیچے
ملک کا سیاسی استحکام معاشی استحکام سے وابستہ ہے لیکن سیاسی پھنے خان نہیں سمجھ سکتے ہیں؟